اسپورٹس بورڈ میں ہاکی کو نظر انداز نہ کیا جائے،ہاکی فیملی

اسپورٹس بورڈ میں ہاکی کو نظر انداز نہ کیا جائے،ہاکی فیملی

پاکستان اولیمپیئنز فورم اور ہاکی فیملی کے ترجمان رائو سلیم ناظم نے حکومت سے اپیل کی ہے کہ حکومت پاکستان اسپورٹس بورڈ کے ایگزیکیٹو بورڈ سے قومی ہاکی کھیل کی نمائندگی کو نظر انداز نہ کرے بلکہ غیر متنازع ہاکی کی شخصیات کو نمائندگی دے۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے گزشتہ روز میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے کہا کہ حکومت نے ہاکی پر اربوں روپے خرچ کیے لیکن ہاکی وہیں کی وہیں ہے اور اب عالمی درجہ بندی میں 17 ویں پوزیشن پر ہے۔ انہوں نے وفاقی وزیر بین الصوبائی رابطہ ڈاکٹر فہمیدہ مرزا سے اپیل کی ہے کہ حکومت کی جانب سے فیڈریشن کو دی گئی رقوم کا آڈٹ کروانے کے ساتھ ساتھ گزشتہ سالوں میں ہاکی کی کارکردگی پر فیڈریشن سے رپورٹ طلب کرے۔

انہوں نے کہا کہ حکومت پاکستان اسپورٹس بورڈ کے ایگزیکیٹو بورڈ سے قومی ہاکی کھیل کی نمائندگی کو نظر انداز نہ کرے بلکہ غیر متنازع ہاکی کی شخصیات جن میں خواجہ ذکاء الدین (سابق قومی کپتان 1965ء)، طارق عزیز (سابق قومی کپتان 1968ء)، خالد محمود (سابق قومی کپتان 1971 ء) اور اولیمپیئن کرنل (ر) مدثر اصغر (سابق سیکرٹری جنرل پی ایچ ایف) شامل ہیں میں سے کسی ایک کو ایگزیکٹو بورڈ میں نمائندگی دے۔

Related posts

Leave a Reply

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے